آج صبح لاہور میں ایک بیکری میں آگ لگنے سے پانچ افراد جاں بحق ہو گئے جن میں ایک نو مسلم بھائی بھی تھا سوفٹویئر انجینئرنگ سے تعلق رکھنے والا یہ نو مسلم بھائی ابھی چار سال قبل ہی حلقہ بگوش اسلام ہوا بڑے شوق سے اپنا نام محمد اعذان منتخب کیا آج ناشتہ کا سامان لینے کے لئے آفس سے نیچے بیکری میں جیسے ہی داخل ہوا تو بیکری میں لگی آگ نے باہر آنے کا موقع ہی نہیں دیا اور بل آخری اپنے خالقِ حقیقی سے جا ملا اللہ سبحان و تعالٰی محمد اعذان پر آخرت کی ساری منزلیں آسان فرمادیں آمین. محمد اعذان کی وصیت تھی چونکہ میں مسلمان ہو چکا ہوں لہٰذا میرے مرنے کے بعد مجھے غسل، تکفین، نماز جنازہ اور تدفین یعنی آخری تمام معاملات قرآن و سنت کے مطابق ادا کئیے جاویں مگر صبح سے ایک عجیب صورتحال حال کا سامنا ہے کہ مسیحی برداری اس بات پر بضد ہے کہ ہم اس کے وارث ہیں اور ہم اپنے طریقے سے ہی اسکی تکفین و تدفین بجا لاویں گے مگر ہم پولس کو ہاتھ جوڑ کر درخواست کر رہے ہیں کہ جناب یہ بھائی مسلمان ہو چکا ہے اسکے وارث ہم مسلمان ہیں اور اسکا اسلامی تعلیمات کے مطابق تکفین و تدفین کا فریضہ سر انجام دینا چاہتے ہیں مگر ابھی تک پولیس کی جانب سے بھی کوئی سنجیدہ کارروائی عمل میں نہیں آسکی آپ تمام احباب سے درخواست ہے کہ دعا کریں کہ اللہ ہر قسم کے شر، فتنہ و فساد سے محفوظ رکھتے ہوئے اس نو مسلم بھائی کی میت کو حاصل کرنے میں ہمارے لئے آسانی فرمائے اور اسلامی تعلیمات کے مطابق تکفین و تدفین کر نے کی توفیق عطا فرمائے آمین. عاجز عبد الوارث میاں ریاض

Categories: Article's